شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ حکومت کی ناکامی کے باعث پولیس اور شہریوں کی جانیں گئیں، لاہور میں جو کچھ ہوا اس کے حقائق سامنے نہ آسکے۔

سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ملکی حالات خراب ہوتے جا رہے ہیں، کسی کو پرواہ نہیں، وزیراعظم کی گزشتہ روز تقریر کی کسی کو سمجھ نہیں آئی، عمران خان میں ہمت تھی تو پارلیمنٹ میں تقریر کرتے، مذاکرات کرنے تھے تو پھر کالعدم قرار کیوں دیا؟۔

شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ ناموس رسالت ﷺ کے معاملے پر اسلامی دنیا میں کوئی دو رائے نہیں، حکومت جو وعدے کرتی ہے وہ پارلیمنٹ کے سامنے لانے چاہئیں، جس ملک کے وزیر جھوٹ بولتے ہوں وہاں کیا توقع رکھی جاسکتی ہے۔

Previous article‘فرانسیسی سفیر کی ملک بدری کی قرار داد آج قومی اسمبلی میں پیش کی جائے گی’
Next articleوزیراعظم نے جہانگیر ترین گروپ کی بات سننے کا عندیہ دیدیا: ذرائع